Aye Rozadaron Khaak Urao

Aye Rozadaron Khaak Urao MP3 Download

Aye Rozadaron Khaak Urao MP3 Noha By Mesum Abbas

Listen online or download this beautiful Noha sharif in the beautiful voice of Mesum Abbas.

Aye Rozadaron Khaak Urao is a Noha recited by Mesum Abbas. Listen this Noha online or download in MP3 format from thenaatsharif.com

Aye Rozadaron Khaak Urao is one of the best MP3 Noha by Mesum Abbas.

Aye Rozadaro Khaak Uraao

Taboot Uth Raha Hai JANAB E AMEER Ka..

Is Din Ko Bhi Ashoor Banao

Taboot Uth Raha Hai JANAB E AMEER Ka..

1). HASNAIN Se Karti Thi’n Buka ZAINAB E KUBRA

Taza Tha Abhi Madar E Dilgeer Ka Sadma

Ab Dagh Yateemi Ka Uthao..

2). Ek Simt Se Taboot Uthayenge Farishte

Aur Mehwe Buka Dusri Janib Se Hain Bete

SALMAN O ABUZAR Ko Bulao..

3). Ye Ghum Bine Muljim Ne Diya AAL E NABI Ko

Sajde Mein Kiya Qatl Mere BABA ALI Ko

Aye Logo Mera Dard Batao..

4). Baba Ne Dam E Rukhsat E Aakhir Ye Kaha Tha

ABBAS Hai Zamin Meri ZAINAB Ki Rida Ka

GHAZI Ko Ye Ahsaas Dilao..

5). Taboot Mera Naaqe Pe Kar Dena Rawana

Ruk Jaye Jahan Naaqa Wahi’n Qabr Banana

Hai Waqt Wasiyat Ko Nibhao..

6). Ab Kon Bhala Saya E Deewaar Banega

Bewao’n Yateemo’n Ka Madadgaar Banega

Kufe Ke Ghareebo’n Ko Batao..

7). Ekkiswi(21) Ramzan Qayamat Ka Tha Manzar

Thi ZAINAB E Muztar Ki Sada MESUM O MAZHAR

Ab Kaise Jiyu’n Koi Batao..

Urdu Lyrics

اے روزہ داروں خاک اُڑاو

تابوُت اُٹھ رہا ہے جنابِ امیر کا

اس دن کوبھی عاشوُر بناو

تابوت اُٹھ رہا ہے جنابِ امیر کا

حسنین سے کرتی تھیں بُکا زینبِ کُبریٰ

تازہ ہے ابھی مادرِ دلگیر کا صدمہ

اب داغ یتیمی کا اُٹھاو

تابوت اُٹھ رہا ہے جنابِ امیر کا

اک سمت سے تابوت اُٹھائینگے فرشتے

اور محوِ بُکا دوسری جانب سے ہیں بیٹے

سلمان و ابوزر کو بُلاو

تابوت اُٹھ رہا ہے جنابِ امیر کا

اب کون بھلا سایۂ دیواربنے گا

بیواوں یتیموں کا مددگار بنے گا

کُوفے کے غریبوں کو بتاو

تابوت اُٹھ رہا ہے جنابِ امیر کا

یہ غم بنِ مُلجم نے دیا آلِ نبی کو

سجدے ميں کیا قتل میرے بابا علی کو

اے لوگو میرا درد بٹاو

تابوت اُٹھ رہا ہے جنابِ امیر کا

بابا نے دمِ رُخصت ِ آخر یہ کہا تھا

عبّاس ہے ضامن میری زینب کی ردا کا

غازی کو یہ احساس دلاو

تابوت اُٹھ رہا ہے جنابِ امیر کا

تابوت میرا ناقے پہ کردینا رونہ

رُک جائے جہاں ناقہ وہیں قبر بنانا

ہے وقت وصیّت کو نبھاو

تابوت اُٹھ رہا ہے جنابِ امیر کا

اکیسویں رمضان قیامت کا تھا منظر

تھی زینبِ مُضطر کی صدا میثم و مظہر

اب کیسے جیوں کوئی بتا و

تابوت اُٹھ رہا ہے جنابِ امیر کا

Audio Credits

Poet & Composer: Mazhar Abidi

Chorus: Rizwan Mirza – Hasnain Mehdi – Sunny – Shahrukh

Arrangement: Faisal Ashraf – Ashraf Ali

Chief Audio Engineer: M. Omer Qureshi

Sound Engineer: M. Ovais Qureshi

Mixed & Mastered: ODS Studio – Karachi

Aye Rozadaron Khaak Urao MP3 Download

To Download Aye Rozadaron Khaak Urao in MP3 format, please click on the below image.

Aye Rozadaron Khaak Urao MP3 Download

Aye Rozadaron Khaak Urao Lyrics

Lyrics Not Available

Popular Tags

  • Aye Rozadaron Khaak Urao Mp3 Download
  • Download Aye Rozadaron Khaak Urao in Mp3
  • Mesum Abbas Mp3 Nohas
  • Download Mesum Abbas Mp3 Noha “Aye Rozadaron Khaak Urao”